یوم عرفہ سے قبل بازاروں میں کافی گہما گہمی کے بیچ بدترین ٹریفک جام

اہم شاہراہوں اور مصروف ترین بازاروں میں گھنٹوں گاڑیاں درماندہ

0 79

سرینگر/: عرفہ سے ایک دن قبل جہاں بازاروں میں کافی گہما گہمی دیکھنے کو ملی وہیں پر مختلف اہم بازاروں اور شاہراہوں پر سخت ترین ٹریفک جام دیکھنے کو ملا جس کی وجہ سے مسافروں کو گاڑیوں میں کئی کئی گھنٹے درماندہ ہوکے رہنا پڑا ۔ کرنٹ نیوز آف انڈیا کے مطابق عید الفطر کے یوم عرفہ سے ایک دن پہلے ہی وادی کشمیر کے تمام اضلع میں اہم بازاروں میں کافی گہما گہمی دیکھنے کو ملی اور لوگ عید کے حوالیسے مختلف اشیاء کی خریداری میں مصروف دکھائی دئے وہیں پر مختلف چوراہوں، اہم بازاروں اور سڑکوں پر سخت ترین تریفک جام بھی دیکھنے کو ملا ۔ ٹریفک جام کی وجہ سے مسافروں کو کئی کئی گھنٹوں تک گاڑیوں میں درماندہ ہوکے رہنا پڑا۔ اس دوران معلوم ہوا ہے کہ گاڑیوں میں درماندہ مسافروں کو شدید مشکالت کا سامنا کرنا پڑا۔ خاص کر مریضوں ، خواتین ، بچوں اور بزرگوں کو گاڑیوں میں گھنٹوں بند رہنے کی وجہ سے شدیدتکالیف کا سامانا کرنا پڑا۔ اس دوران ذرائع نے بتایا کہ کئی جگہوں پر ٹریفک جام میں ایمبولنسیں بھی درماندہ تھیں اور ا ن کو بھی آگے جانے میں دشواریوں پیش آرہی تھیں ۔ شہرسرینگر کے مختلف بازاروں اور چوراہوںجن میں بٹہ مالو، لالچوک، جہانگیر چوک ،ڈلگیٹ، اور دیگر جگہوں پر سخت ترین ٹریفک جام رہا جہاں پر سینکڑوں کی تعدادمیں قطار در قطار گھنٹوں درماندہ رہیں ۔ اس دوران مصروف ترین بازاروں میں بھی لوگوں کی بھیڑ کی وجہ سے ٹریفک کی نقل و حمل متاثرہ رہی اور ٹریفک جام ہوا۔ ادھر جنوبی کشمیر کے ضلع اننت ناگ میں بھی ٹریفک کا بدترین جام دیکھنے کو ملا۔ جبکہ بارہمولہ ،سوپور، کپوارہ کے مین بازاروں میں بھی ٹریفک جام میں لوگ گھنٹوں درماندہ ہوکے رہ گئئے ۔

تبصرے
Loading...