گورئمنٹ ہائیر اسکنڈری اسکول رہمو پلوامہ میں اہم مضامین نہیں

61

طلباء سرینگر اور پلوامہ کا رخ کرنے پر مجبور ، محکمہ تعلیم پر سوالیہ نشان

سرینگر : گورئمنٹ ہائیر اسکنڈری اسکول رہمو پلوامہ میں کچھ اہم مضامین کی عدم دستیابی کے باعث طلبا کو کافی مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے ۔ اسی دوران ضلع میں دو مزید ہائر اسکنڈری اسکول بغیر پرنسپل کے ہیں جس کی کوئی توجہ فراہم نہیں کیا جا رہی ہے ۔سی این آئی کو نمائندے نے پلوامہ سے اس ضمن میں اطلاع دی ہے کہ گورئمنٹ ہائر اسکنڈری اسکول رہمو پلوامہ میں اہم مضامین کی عدم دستیابی کے باعث طلبا کو سخت ترین مشکلات کا سامنا ہے ۔معلوم ہوا ہے کہ ہائر اسکنڈری اسکول میں کامراس ، اسلامک سٹیڈیز ، فیزیکل ایجوکیشن اور اس کے علاوہ کئی اہم مضامین نہیں پڑھائیں جا رہے ہیں جس کے باعث درجنوں دیہات کے طالب علموں کو دور افتاد علاقوں میں پڑھائی حاصل کرنے کیلئے جانا پڑ رہا ہے ۔ معلوم ہوا ہے کہ اسکول میں تین سو سے زائد طالب علم زیر تعلیم ہے تاہم اہم اسٹریم اسکول میں موجود نہ ہونے کے باعث وہ ان مضامین کو پڑھنے سے قاصر ہے ۔ اسکول میں زیر تعلیم طلبہ نے مطالبہ کیا کہ ہائر اسکنڈری میں ان اہم مضامین کو لاگو کیا جائے تاکہ انہیں آئندہ کسی طرح کا مشکلات کا سامنا نہ کرنا پڑے ، انہوں نے کہا کہ اہم مضامین کی عدم دستیابی کے نتیجے میں ان دور درواز علاقوں کا سفر کرکے انہیں ان اہم مضامین کیلئے پڑھائی کرنے کیلئے جانا پڑ رہا ہے ۔ اسی دوران معلوم ہوا ہے کہ گورئمنٹ ہائر اسکنڈری اسکول رنتی پورہ اورسامبور ہ اسکول سربراہان کے بغیر ہے ۔ بتایا جاتا ہے کہ دونوں ہائر اسکنڈریوں میں پرنسپل کی عدم موجودگی کے باعث اسکول میں بیشتر کام کاج متاثر ہو رہا ہے جبکہ طلبہ کو شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہاہے ، دونوں ہائیر اسکنڈریوں میں زیر تعلیم طلبہ کا کہنا ہے کہ پرنسپل کی عدم دستیابی کے باعث انہیں مختلف کاغذات کو لیکر کافی دشورایوں کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے ۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ دونوں مقاما ت پر اسکول سربراہان کی تعیناتی جلد از جلد یقینی بنائی جائے ۔( سی این آئی )

تبصرے
Loading...