کشمیر بھارت کا اٹوٹ انگ ، کشمیر کو بھارت کیخلاف استعمال کرنے کی کوششوں کامیاب نہیں ہوگی /سشما سوراج

عمران خان امن کے حامی ہیں تو مسعود اظہر ہمارے حوالے کردیں
پڑوسی ملک کی سرزمین سے اور کوئی حملہ ہوا تو بھارت خاموش نہیںبیٹھے گا

سرینگر/: پاکستان کے وزیر اعظم عمران خان اتنے بڑے امن کے داعی ہیں تو جیش محمد کے سربراہ مسعود اظہر کو بھارت کے حوالے سے کیوں نہیں کردیتے کی بات کرتے ہوئے بھارتی خاتون وزیر خارجہ ششما سوراج نے کہا ہے کہ بھارت پاکستان کیساتھ کشیدگی بڑھانے کے حق میںنہیں ہے تاہم انہوںنے خبردار کیا کہ اگر پڑوسی ملک کی سرزمین سے اور کوئی حملہ ہوا تو بھارت خاموش نہیںبیٹھے گا۔ انہوںنے کہا کہ لیتہ پورہ حملے کے بعد مختلف ممالک کے وزرائے خارجہ نے ان کے ساتھ ٹیلی فون پر رابطہ کیا اور حملے میں فورسز اہلکاروں کے ہلاک ہونے پر تعزیت کا اظہار کیا۔ ششما سوراج نے کہا کہ مختلف ممالک کے وزرائے خارجہ نے ٹیلیفونک رابطے کے دوران امید ظاہر کی کہ بھارت پاکستان کے ساتھ کشیدگی کو نہیں بڑھائے گا جس پر میں نے انہیں یقین دلایا کہ بھارت پڑوسی ملک کے ساتھ کشیدگی بڑھانے کے حق میں نہیںہے۔۔سی این آئی مانیٹرنگ کے مطابق نئی دلّی میں نریندر مودی حکومت کی خارجہ پالیسی پر تبصرہ کرتے ہوئے وزیرخارجہ ششما سوراج نے کہا’’پلوامہ حملے کے بعد بھارت پاکستان کے ساتھ کشیدگی کو بڑھانا نہیںچاہتا۔تاہم اگر اس کی (پاکستان کی) سرزمین سے اور شدت پسندانہ حملہ ہوتا ہے تو بھارت ہرگز خاموش نہیں بیٹھا گا‘‘۔انہوں نے کہا’’پلوامہ حملے کے بعد مختلف ممالک کے وزرائے خارجہ نے ٹیلیفون پر میرے ساتھ رابطہ کیا اور سی آر پی ایف اہلکاروں کے ازجاں ہونے پر تعزیت اور یکجہتی کا اظہار کیا،وزرائے خارجہ نے اس امید کا اظہار کیا کہ بھارت پاکستان کے ساتھ کشیدگی کو کم کرے گا ‘‘۔ششما سوراج کا کہنا تھا’’میں نے وزرائے خارجہ کو یقین دلایا کہ بھارت کشیدگی نہیںبڑھائے گا تاہم اگر کوئی اور حملہ ہوتا ہے تو اس صورت میںبھارت خاموش نہیںبیٹھے گا‘‘پاکستان کے نام پیغام دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ عمران خان اتنے بڑے امن کے داعی ہیں تو جیش محمد کے سربراہ مسعود اظہر کو بھارت کے حوالے سے کیوں نہیں کردیتے۔ تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیر خارجہ سشما سوراج نے کہا کہ عمران خان بڑے سیاستدان ہیں اور امن کے حامی ہیں، اگر پاکستانی وزیراعظم عمران خان اتنے بڑے امن کے داعی ہیں تو جیش محمد کے سربراہ مسعود اظہر کو بھارت کے حوالے سے کیوں نہیں کردیتے۔ انہوںنے کہا کہ پاکستان دوہری پالیسی پر گامزن ہے اور اگر پاکستانی وزیر اعظم عمران خان ہمت والے ہیں تو مسعود اظہر کو ہندوستان کے حوالے کرے ۔ انہوں نے واضح کیا کہ کشمیر بھارت کا ابھنیہ انگ ہے اور کشمیر کو بھارت کے خلاف استعمال کرنے کی کوششوں کو کامیاب نہیں ہونے دیا جائے گا۔ بھارتی وزیر خارجہ سشما سوراج کو کشمیر کو ایک بار پھر بھارت کا اٹوٹ انگ قراردیتے ہوئے کہا ہے کہ کشمیر بھارت کا ابھنیہ انگ ہے اور اس کو بھارت کے خلاف استعمال کرنے کی ہم قطعی اجازت نہیں دیں گے ۔ وزیر خارجہ سشما سوراج نے کہا کہ پاکستان جیش محمد کے سرغنہ مسعود اظہر کو ہندوستان کو سونپ کروزیر اعظم عمران خان اپنی سیاسی سوجھ بوجھ ثابت کر سکتے ہیں۔ سوراج نے کہا’’اگر عمران خان (پاکستانی وزیر اعظم) اتنے عالمی ہمت ہیں تو دے دیں مسعود اظہر کو ہمیں‘‘۔ایک طرف تو پاکستان کے وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا کہ جیش محمد سربراہ مسعود اظہر پاکستان میں ہے اور دوسری طرف، پاک فوج نے کہا کہ جیش محمد کا پاکستان میں کوئی وجود نہیں ہے۔

تبصرے
Loading...