پونچھ میں سوموار کو ایک بار پھر ہندوپاک افواج کے مابین گولی باری

ایک فوجی اہلکاز خمی، اڑہائی ماہ کے دوران پچاس سے زائد بار ناجنگ معاہدے کیخلاف ورزی

0 32

سرینگر: پونچھ میں سوموار کو ایک بار پھر پاکستانی فوج نے ہندوستانی فوجی ٹھکانوںکونشانہ بناکرگولہ باری کی جس کے نتیجے ایک فوجی اہلکار زخمی ہوا ہے جبکہ گذشتہ 24گھنٹوںکے دوران ہندوپاک افواج کے مابین ہوئی گولہ باری میں دو لڑکیوں سمیت تین افراد زخمی ہوگئے ہیں ۔ کرنٹ نیوز آف انڈیا کے مطابق ضلع پونچھ میں کنٹرول لائن پر ہند۔پاک افواج کے مابین سوموار کوکراس فائرنگ کے واقعہ میں ایک فوجی اہلکار زخمی ہوا ہے۔ذرائع کے مطابق پاکستانی افواج نے بھارتی ٹھکانوں کو پونچھ کے کرشنا گھاٹی سیکٹر میں آج صبح نشانہ بنایا۔بھارتی افواج نے بھی گولیوں کا جواب دیدیا اور یوں کراس فائرنگ کا آغاز ہوا۔اس واقعہ میں ایک فوجی اہلکار گولی لگنے کے نتیجے میں زخمی ہوگیا جس کو نزدیکی فوجی اسپتال منتقل کیا گیا۔فوری طور پر زخمی فوجی کی شناخت نہیں ہوسکی۔ یاد رہے کہ گذشتہ روز پاکستانی فوج کی جانب سے کی گئی گولہ باری میں دو لڑکیاں شل سے نکلنے والی آہنی زروں کی زد میں آکر زخمی ہوگئیں تھیں اور اس طرح چوبیس گھنٹوں کے دوران آر پار گولہ باری میں تین افراد زخمی ہوگئے ہیں۔ یاد رہے کہ گذشتہ اڑھائی ماہ کے دوران صرف ضلع پونچھ کے مختلف سرحدی پٹیوں پر 50سے زائد ہندوپاک افواج کے مابین گولہ باری ہوئی۔

تبصرے
Loading...