ویڈیو:‌سر ینگر جموں وشاہراہ پر بند شیں اور کروپشن، فروٹ ایسو سی ایشن پارم پورہ کا29 اپریل سے غیر معینہ ہڑتا ل کا فیصلہ

0 295

سرینگر:سر ینگر جموں وشاہراہ پر ہفتہ میں دوروزہ بند شیں اورشاہراہ پر کروپشن کے خلاف فروٹ ایسو سی ایشن رام پورہ سرینگر نے29 اپریل سوموار سے غیر معینہ مدت کیلئے اپنا کاروبار بند رکھنے کا فیصلہ کیا ہے۔ سی این ایس کے مطابق پارمپورہ فروٹ ایسو سی ایشن نیو فروٹ کمپلیکس پارم پورہ سرینگر نے ریاستی سرکار پر الزام عائد کرتے ہوئے کہا کہ ان کی میوہ تجارت کو جان بوجھ کر نقصان سے دوچار کیا جارہا ہے۔ ایسو سی ایشن نے آ ج ایک اجلاس میں حکومت کے معاندانہ سلوک کے خلاف 29اپریل سوموارسے غیر معینہ مدت کے لیے ہڑتال کر نے کاعلان کرتے ہوئے ایسو سی ایشن سے وابستہ تمام ممبران اپنی تمام قسم کی کاروباری سرگرمیاں معطل رکھنے کی ہدایت دی گئی ہے۔ ایسو سی ایشن کے صدر بشیر احمد بشیر نے واضح کیا کہ ہڑتال کے دوران فروٹ منڈی کے تمام دروازے مقفل رہیں گے۔ انہوں نے کہا کہ سرینگر سے گزشتہ کئی دنوں کے دوران سینکڑوں مال بردار گاڑیاں بیرون ریاست کے لیے نکلی تھیں تاہم حکومت کی غیر ضروری مداخلت سے مذکورہ گاڑیاں ابھی بھی شاہراہ پر ہی کھڑی ہے اور انہیں آگے جانے کی اجازت نہیں دی جارہی ہے۔ ایسو سی ایشن کے مطابق ریاستی حکومت جان بوجھ کر ان کے کاروبار وکو تباہ کرنا چاہتی ہے اور اسی لیے سرینگر جموں شاہراہ پر بلاجواز انکی گاڑیوں کو روکے رکھا گیا ہے۔ انہوں نے کہاکہ سرینگر جموں وشاہراہ پر ٹریفک پولیس کی رشوت خوری کا بازار دن بہ دن زورپکڑ تا جارہا ہے۔ رشوت نہ دینے پر گاڑیوں کو دنوں تک شاہرا ہ پر روکے رکھا جا تاہے۔ ٹریفک پولیس کے اس رویہ سے فروٹ، سبزی گرورس کو کروڑوں روپے کا نقصان اٹھا
نا پڑرہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ وادی کے مختلف کولڈ اسٹوروں میں جو سیب ملک کے دوسر ے حصوں میں سپلائی کیے جاتے ہیں ان کو بھی دس دس دنوں تک کھلی دھوپ میں کھڑا کیا جاتاہے۔ انہوں نے کہا کہ اس ضمن میں سیول اور پولیس کو حکام کو مطلع کیا گیا لیکمن ابھی تک اس رشوت خوری کے ازالے کے لئے کوئی اقدامات نہیں کئے گئے ہیں۔

تبصرے
Loading...