وزیر اعظم نریندر مودی کی نئی کابینہ میں پُرانے چہروں کے ساتھ ساتھ نئے چہرے بھی شامل

بھاجپا کے قومی صدر امت شاہ کو وزیر داخلہ کا قلمدان ، نرملا کو وزیر خزانہ اور راجناتھ کو دفاع کا قلمدان سونپا گیا

0 130

سرینگر/31مئی/سی این آئی// بھارتیہ جنتا پارٹی کی جانب سے پارلیمانی انتخابات میں تاریخی جیت کے بعد وزیر اعظم نریندر مودی نے آج اپنی کابینہ بھی تشکیل دی جس میں کچھ پُرانے چہروں کے ساتھ ساتھ کچھ نئے چہروں کو بھی شامل کیا گیا ہے ۔ بھارتیہ جنتا پارٹی کے قومی صدر اور سخت گیر امت شاہ کو وزارت داخلہ کا قلمدان سونپا گیا جبکہ سابقہ وزیر داخلہ راجناتھ سنگھ کو وزارت دفاع کا قلمدان سونپا گیا اس طرح سابقہ وزیر دفاع نرملا سیتا رمن کو ارون جیٹلی کا قلمدان تفویض کیا گیا ۔ کرنٹ نیوز آف انڈیا کے مطابق وزیراعظم نریندرمودی نے جمعہ کو اپنی نئی کابینہ کے اراکین کے محکموں کا اعلان کردیا،جس میں اپنے بھروسے مند بھارتیہ جنتا پارتی کے صدر امت شاہ کو نیا وزیر داخلہ اور گزشتہ حکومت میں وزیر داخلہ رہے راج ناتھ سنگھ کو وزیر دفاع بنایاگیا ہے۔آج دوپہر اعلان کردہ نئے وزرا میں سابق وزیر دفاع نرملا سیتارمن کو ارون جیٹلی کی جگہ وزیر خزانہ کی اہم ذمہ داری سونپی گئی ہے۔جیٹلی نے خراب صحت کی وجہ سے وزیر بننے سے انکار کردیا تھا۔ سشما سوراج کی جگہ سابق خارجہ سکریٹری ایس جے شنکر کو نیا وزیر خارجہ بنایا گیا ہے۔ سوراج بھی خراب صحت کی وجہ سے اس بار انتخابات میں کھڑی نہیں ہوئی تھیں۔گزشتہ حکومت میں دیہی ترقی کے وزیر رہے نریندر سنگھ تومر کو پرانے محکمے کے ساتھ وزارت زراعت کی بھی ذمہ داری سونپی گئی ہے۔اتراکھنڈ کے سابق وزیرالعی رمیش پوکھریال نشنک کو انسانی وسائل کی ترقی کی وزارت ، پیوش گوئل کو ریلوے،کامرس اور صنعت، نتن گڈکری کو شاہراہ ،ٹرانسپورٹ اور جہاز رانی محکمے کے ساتھ درمیانی ،چھوٹی اور سب سے چھوٹی صنعتوں (ایم ایس ایم ای)، دھرمیندر پردھان کو پٹرولیم اور اسٹیل اور روی شنکر پرساد کو اطلاعات و نشریات اور وزارت قانون کا کام کاج سونپا گیا ہے۔وزیراعظم نریندرمودی نے عملے، عوام کی شکایت اور پینشن، نیوکلائی توانائی، خلائی محکمے، اہم پالیسی ساز مسئلے اور ایسے سبھی محکمے اپنے پاس رکھے ہیں جو کسی کو الاٹ نہیں کئے گئے ہیں۔سمریتی ایرانی کو ان کے پرانے محکمے کپڑے کی وزارت کے ساتھ ساتھ خواتین و اطفال کی فلاح و بہبود کی وزارت، مہیندر ناتھ پانڈے کو مہارت کی ترقی کی وزارت اور پرہلاد جوشی کو پارلیمانی امور اور کوئلہ اور کان کی وزارت کا وزیر بنایا گیا ہے۔رام ولاس پاسوان کو محکمے میں کوئی تبدیلی نہیں کی گئی ہے اور وہ پہلے کی طرح خوراک کی فراہمی اور صارفین امور کے وزیر بنے رہیں گے۔اسی طرح سے ہرسمرت کور بادل بھی پہلے کی طرح فوڈ پروسیسنگ کی صنعت کی وزارت اور مختار عباس نقوی اقلیتی امور کے وزیر بنے رہیں گے۔تھاور چندر گہلوت کو سماجی انصاف اور تفویض اختیارات اور ارجن منڈا کو قبائلی فلاح وبہبود کی وزارت کا وزیر بنایاگیا ہے۔ ڈاکٹر ہرش وردھن کو صحت ،خاندانی بہبود، سائنس ٹیکنالوجی اور ارضیاتی سائنس کا وزیر بنایاگیا ہے اور ڈی وی سدانند گوڑا کیمیکل اور فرٹیلائزر کے وزیر بنے رہیں گے۔واضح رہے کہ بھارتیہ جنتا پارٹی نے پارلیمانی انتخابات 2019میں تواریخی جیت درج کرتے ہوئے 300سے اوپر نشستوں پر قبضہ کرلیا ۔ (سی این آئی )

تبصرے
Loading...