عوام کے مزاج کو بھانپ نہیں پایا اپوزیشن/ وزیر اعظم نریندر مودی

کشمیرکو ہم کسی بھی قیمت پر الگ نہیں ہونے دیں گے

0 21

سرینگر/// مالدیپ کے دورہ سے قبل کیرالہ میں پوجا کے بعد وزیر اعظم نریندر مودی نے حاضرین سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ اپوزیشن جماعتوں کے لیڈران عوامی مزاج پہنچانے میں غلطی کرگئے ۔ انہوں نے کہا کہ لوگوں کو ملکی سالمیت زیادہ عزیز ہے اسلئے ہم نے کشمیر کو ہم سے چھیننے کے دشمنوں کو کرارا جواب دیکر لوگوں کے دل جیت لئے جنہوںنے ہمیں دیش کی خدمت کا ایک اور موقع فراہم کیا ۔ کرنٹ نیوز آف انڈیا کے مطابق وزیر اعظم نریندر مودی نے ہفتہ کے روز مالدیپ کے دورہ سے قبل کیرالہ کے ایک مندر میں حاضری دی جس دوران وہاں جمع بھیڑ اور دیگر حاضرین سے خطاب کرتے ہوئے وزیر اعظم نے کہا کہ ہم کشمیر کو کسی بھی قیمت پر بھارت سے الگ نہیں ہونے دیں گے ۔ وزیر اعظم نے کسی بھی پارٹی یا لیڈر کا نام لئے بغیر کہا کہ کہ اپوزیشن جماعتوں کے لیڈران عوام کا مزاج جاننے میں ناکام ہوگئے ہیں جس کی وجہ سے انہیں شکست کا سامنا کرنا پڑا۔ انہوں نے کہا کہ ملک کی سرکھشا ہماری اولین ترجیح ہے اور اگر یہاں امن و شانتی ہوگی تو بے روزگاری اور تعمیر و ترقی خود بخود ہوگی ۔ ذرائع کے مطابق پوجا ارچنا کرنے کے بعد وزیر اعظم مودی نے کارکنان کی’ ابھینو سبھا‘ سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ سیاسی پنڈت عوام کا مزاج پہچان نہیں پائے۔ انہوں نے کہا کہ کیرالہ میرے لئے بنارس جیسا ہے۔وزیر اعظم نریندر مودی نے مالدیپ جانے سے پہلے کیرالہ کے گرووایورپن(شری کرشن) مندر میں پوجا ارچنا کی۔ اس دوران گرووایورپن مندر میں وزیر اعظم نریندر مودی کو کمل کے پھول سے تولا گیا۔وزیر اعظم نے کہا کہ جنہوں نے ہمیں نہیں جتایا وہ سبھی بھی ہمارے ہی ہیں۔ سیاست میں ہم صرف اقتدار بنانے نہیں آئے ہیں۔ سیاست میں ہم ملک بنانے کے لئے آئے ہیں۔ ہم عوامی خدمتگار ہیں اور عوام کے تئیں ہم وقف ہیں۔انہوں نے کہا کہ کشمیر کو ہم سے الگ کرنے کی کوشش کرنے والوں کو ہم نے کرارا جواب دیکر لوگوں کے دل جیت لئے ہیں ۔ہفتہ کو مالدیپ میں رکنے کے بعد اتوار کو نریندر مودی سری لنکا پہنچیں گے۔ دورہ پر روانہ ہونے سے پہلے مودی نے کہا تھا کہ دونوں جگہ کا ان کا یہ دورہ پڑوسی پہلے کی پالیسی کو ظاہر کرتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اس دورہ سے دونوں ہی ملکوں سے ہندوستان کے رشتے مزید مضبوط ہوں گے۔( سی این آئی )

تبصرے
Loading...