سرحد پار کرنے کی کوشش کے دوران اوڑی میں 4نوجوان گرفتار

ترال میں فورسز کی شبانہ چھاپہ مار کارروائی کے دوران 2طالب علم حراست میں لئے گئے

0 13

سرینگر/14جون/سی این آئی/ فوج نے شمالی کشمیر کے ضلع بارہمولہ میں سرحد پار کرنے کی خواہش رکھنے والے چار نوجوانوں کو گرفتار کرنے کا دعویٰ کیا ہے فوجی ذرائع کے مطابق چار نوجوانوں کوشمالی کشمیر کے اْوڑی میں کنٹرول لائن عبور کرکے پاکستانی زیر انتظام کشمیر کی طرف جانے کی کوشش کرتے ہوئے گرفتار کیا گیا ہے جبکہ جنوبی کشمیر کے قصبہ ترال میں شبانہ چھاپہ مار کارروائی کے دوران فورسز نے دو طالب علموں کو گرفتار کرلیا ہے جن سے پوچھ تاچھ جاری ہے ۔کرنٹ نیوز آف انڈیا کے مطابق چار نوجوانوں کوشمالی کشمیر کے اْوڑی میں کنٹرول لائن عبور کرکے پاکستانی زیر انتظام کشمیر کی طرف جانے کی کوشش کرتے ہوئے گرفتار کیا گیا ہیاطلاعات میں بتایا جارہا ہے کہ ان چاروں نوجوانوں نے حال ہی میں عسکریت میں شمولیت اختیار کی تھی اور وہ اب پاکستانی زیر انتظام کشمیر جانے کیلئے کوشاں تھے کہ اْنہیں لمبر علاقے میں بونیار کے مقام پر گرفتار کیا گیا۔ان چار نوجوانوں کی گرفتاری فوج اور سی آر پی ایف کی ایک مشترکہ پارٹی نے گذشتہ رات کے دوران عمل میں لائی۔فوجی ذرائع نے ان گرفتاریوں کی تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ گرفتار شدگان نے حال ہی میں عسکریت میں شمولیت اختیار کی تھی۔انہوں نے گرفتار شدگان کی شناخت 22سالہ عادل احمد ڈار ولد غلام حسن ڈار ساکنہ ہردو ہانگیر یاری پورہ ،کولگام،19سالہ طاہر شمیم لون ولد شمیم احمد لون ساکنہ کاپرن شوپیان،18سالہ سمیر بٹ ولد غلام حسن بٹ ساکنہ سیر داری سوپور اور 19سالہ نوید پراولد غلام نبی پرا ساکنہ تاپر پٹن کے طور کی ہے۔گرفتار شدگان پولیس کی تحویل میں ہیں جہاں اْن کی پوچھ تاچھ جاری ہے۔ادھرجنوبی کشمیر کے قصبہ ترال میں شبانہ چھاپہ مار کارروائی کے دوران دو نوجوانوں کو گرفتار کرلیا گیا ہے ۔ ذرائع سے معلوم ہوا ہے کہ فورسز نے ترال میں گزشتہ شب رات کی تاریکی میں چھاپہ مار کارروائی کے دوران دو نوجوانوں جن کی شناخت شوکت احمد جو کہ بی ایس سی فائنل ائر کا طالب علم ہے اور ندیم احمد وگے بی ایس سی نرسنگ کا طالب علم ہے کو گرفتار کرلیا ہے ۔ مذکورہ نوجوانوں کو جنگجوئوں کے ساتھ مبینہ رابطہ کے شک میں گرفتار کرلیا گیا ہے اور پولیس سٹیشن ترال میں ان کے سے اس بارے میں پوچھ تاچھ جاری ہے ۔ (سی این آئی )

تبصرے
Loading...