رواں ماہ میں ہندوپاک افواج کے مابین پہلی جنگ بندی معاہدے کی خلاف ورزی

راجوری میں بھارت اور پاکستانی فوج کی گولہ باری ، دو فوجی اہلکار زخمی

0 17

سرینگر: رواں ماہ میں پہلی جنگ بندی معاہدے کی خلاف ورزی کرتے ہوئے ہندوستان اور پاکستانی کی افواج کے مابین آج ایک مرتبہ پھر گولیوں کا تبادلہ ہوا جس کے نتیجے میں دو فوجی اہلکار زخمی ہوگئے ہیں جن کو فوری طور پر فوجی ہسپتال پہنچایا گیا جہاں ان کا علاج و معالجہ جاری ہے ۔ راجوری میں کنٹرول لائن پر کراس فائرنگ سے دو فوجی اہلکار زخمی ہوئے ہیں ۔ کرنٹ نیوز آف انڈیا کے مطابق رواں ماہ میں پہلی بار ہندوستان اور پاکستانی افواج نے ایک بار پھر گولیوں کا تبادلہ کیا جس دوران انہوںنے ایک دوسرے کے فوجی پکٹوں پر بھاری گولہ باری کی جس کے نتیجے میں دو فوجی اہلکار زخمی ہوئے ہیں ۔ حکام نے سنیچر کو کہا کہ ضلع راجوری میں کنٹرول لائن پر ہند۔پاک افواج کے مابین فائرنگ کے دوران دو فوجی اہلکار زخمی ہوگئے ہیں۔انہوں نے کہا کہ یہ واقعہ نوشیرا سیکٹرکے رومالی دھارا علاقے میں پیش آیا جہاں دو فوجی اہلکار اگلی چوکی پر پہرہ دیتے ہوئے پاکستانی فائرنگ کی زد میں آکر زخمی ہوگئے۔دفاعی ذرائع ذرائع نے واقعہ کی تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ کراس ایل او سی فائرنگ کا یہ واقعہ پاکستان کی بلاجوازفائرنگ کے نتیجے میں گذشتہ رات نو بجے پیش آیا۔حکام کے مطابق بھارت اور پاکستان کی افواج کے درمیان گولی باری کا سلسلہ رات ساڑھے دس بجے تک جاری رہا۔یاد رہے کہ ہندوستان اور پاکستانی کے مابین جاری کشیدگی کے بیچ اگرچہ سرحدوں پر گزشتہ ہفتے سے خاموشی چھائی رہی تاہم سنیچروار کو ایک مرتبہ پھر بھارت اور پاکستانی فوج نے ایک دوسرے کی فوجی چوکیوں کو نشانہ بناتے ہوئے جدید ترین ہتھیاروں کا استعمال کیا ہے ۔

تبصرے
Loading...