جموں و کشمیر بینک میں پروبیشنری افسران کی تقرری

ریکارڈ مدت میں نتائج ظاہر کر نا حوصلہ افزاء ،عوامی حلقوں نے کی سراہنا

0 141

سرینگر//جموں و کشمیر بینک کی جانب سے اپریل کے آخری ہفتے میں پروبیشنری افسران کیلئے لئے گئے پرلمنری امتحان کے نتائج ایک ریکارڈ مدت میں منظر عام پر لائے گئے ہیں جس سے امیدواروں نے اطمینان کا اظہا ر کیا ہے ۔اس دوران بینک نے Mainsامتحان کے انعقاد کیلئے 20مئی کی تاریخ مقرر کر دی ہے ۔جموں و کشمیر بینک کی جانب سے اپریل مہینے میں پربیشنری افسران کی تقرری کیلئے ابتدائی مر حلہ کے امتحان کا انعقاد کیا گیا۔یہ امتحانات اپریل کی 22تاریخ سے لیکر 26تاریخ تک منعقد کئے گئے اور پروبیشنری افسران کی اسامیوں کیلئے بینک کو 37ہزار500درخواستیں مو صول ہو ئی تھیں ۔بینک نے بھر تی ٹیسٹ کے انعقاد کی خاطر انسٹی چیوٹ آف بینکنگ پرسنل سلیکشن IBPS))اور ٹاٹا کنسلٹنسی سروسز کی خدمات حاصل کی تھیں تاکہ امتحانات کے انعقاد کو شفاف بنایا جا سکے ۔اس دوران ریا ست کے مختلف علاقوں میں امتحانی مراکز قائم کئے گئے تھے اور یہ امتحانات بڑے ہی پیشہ ورانہ طریقہ پر منعقد کئے گئے ۔بینک کی جانب سے ان امتحانات کے نتائج اور پھر Mainsامتحان کیلئے کوالیفائی کر نے والے امیدواروں کی فہرست کل شائع کی گئی جس میں ہزاروں امیدواروں نے مینز امتحان کیلئے کلوالیفائی کر دیا ہے ۔بینک نے امتحان کے انعقاد میں شفافیت کو بنا ئے رکھنے اور پھر Mains کیلئے کوالیفائی نہ کر نے والے امیدواروں کے شکوک و شبہات کو دور کر نے کی خاطر یہ بھی اعلان کیا ہے کہ امیدواروں کی جانب سے لئے گئے امتحان میں حاصل کئے گئے نمبرات کی تفصیل 11مئی سے بینک کی ویب سائیٹ پر مہیا کرا ئی جا ئے گی ۔بینک کی جانب سے انتہا ئی قلیل وقت میں نتا ئج ظاہر کر نے کو ایک خوش آئند قدم قرار دیتے ہوئے کئی امیدواروں نے اس پر اطمینان کا اظہا ر کیا ہے ۔جنوبی ضلع کولگام کے ایک امید وار نے تعمیل ارشاد کو بتا یا کہ بینک کی جانب سے جب ان اسامیوں کیلئے درخواستیں طلب کی گئی تھیں اس وقت سے ہی مختلف قسم کے عناصر بازار میں کرپشن اور اقرباء پروری وغیرہ کا ڈنڈورا پیٹنے لگے تھے تاہم بینک نے امتحانات کے محض کئی دن بعد نتائج ظاہر کر کے ایسے عنا صر کو خاموش کرا دیا ہے ۔انہوں نے کہا کہ بینک کو اس بھر تی عمل کے حوالے سے آگے بھی اسی طرح سے شفافیت اور غیر جانبداری سے کا م کر نا چاہئے تاکہ نہ صرف مستحق امید واروں کو روز گار مل سکے بلکہ بینک کے پاس بھی ذہین اور قابل کار عملہ ہو جو بینک کی تجارتی پالیسیوں اور روز مرہ کے کام کاج میں نئی روح پھونک سکیں ۔

تبصرے
Loading...