بھارتی وزیر کی دھمکی ناقابل برداشت،پانی سر سے اوپرہوتا جارہاہے/فواد چودھری

سندھ آ بی طاس معاہدے کی بھارت برسوں سے خلاف ورزی کررہا ہے

0 211

سر ینگر: دریاؤں کاپانی روک دینے مرکزی وزیرٹرانسپورٹ کی دھمکی کا پاکستان نے سنجیدہ نوٹس لیتے ہوئے کہا کہ سندھ آ بی طاس اور نڈس واٹرٹریٹری کی خلاف ورزی بھارت برسوں سے کررہا ہے تاہم اب پانی سر سے اوپرہوتا جارہاہے اوربھارت کی دھمکیوں کاکچھ توعلاج کرنا پڑے گا ۔اے پی آ ئی کے مطابق پاکستانی وزیراطلاعات نے نتن گٹگری کی جانب سے پاکستان کوتین دریاؤں کاپانی روک دینے کی دھمکی کوناقا بل بردشت قر ردیتے ہوئے کہا کہ پاکستان دشمنی کی ایما ء پر پارلیمنٹ الیکشن لڑنے والے سیاسی لیڈران کو یہ با ت نہیں بھولنی چاہئے کہ کارروائی یک طرفہ ہوگی ۔پاکستان وزیراطلاعا ت و نشریات نے کہا کہ بھارت کئی برسوں سے انڈس وٹرٹریٹی سندھ آبی طاس معاہد ے کی خلاف ورزی کررہاہے اور بھار ت نے ایک درجن کے قریب ہائیڈل پرجیکٹوںکی تعمیرکاکام مکمل کرنے کے قریب پہنچادیاہے اوران ہائیڈل پروجیکٹوںکیلئے جوڈیمب تعمیر کئے گئے ہیں وہ انڈس وٹریٹی اور سندھ آبی طاس معاہدے کے منافی ہے پاکستانی نشریات اور اطلاعا ت کے وزیرنے کہاکہ بھارت تین دریاوں کاپانی پاکستان کودے کرکوئی احسان نہیں کررہاہے بلکہ دونوں ملکوں کے مابین جو معاہدے طئے ہوئے ہیں اس کے ساتھ بھارت پریہ لازمی ہے کہ وہ پانی پاکستان کی جانب بہنے کاسلسلہ جاری رکھے ۔واضح رہے کہ مرکزی وزیرٹرانسپورٹ نتن گٹگری نے اپنے بیان میں کہا تھاکہ اگر پاکستان نے شدت پسندی عسکریت پسندی کوقابو کرنے کیلئے اقدامات نہیں اٹھائے تو تین ندیوںکاپانی پاکستان کیلئے روک دیاجائیگا ۔مرکزی وزیرنے کہا کہ سبھی دریاؤں کوایک دوسرے کے ساتھ جوڑنے کامنصوبہ زیرغور ہے جسسے ملک کے سبھی ریاستوںکے پانی کامسئلہ حل ہوجائیگا ۔انہوںنے کہاکہ چھ ریاستوں میںبند تعمیر کئے جارہے ہے جن میں سے شاہ پور انٹی کابنڈ تعمیرہوچکاہے اور 26 ozarایکڈ میں شاہ پور کانڈی بند کاپانی پنجاب اور ہریانہ کوفراہم کیاجائیگاجہاں 2006MWبجلی بھی تیا رکی جا سکتی ہے ۔مرکزی وزیرنے کہا کہ پاکستان کوچاہئے کہ وہ شدت پسندی اور عسکریت پسندی کوروک کربھارت کی طرف پھرسے دوستی کاہاتھ بڑھائے تو یہ اس کے مفاد میں ہوگا۔

تبصرے
Loading...