بندش شاہراہ ، قاضی گنڈ میں ایمبولنس گاڑی روکنے سے مریض کی موت، سی آر پی ایف کا اظہار رنج ، معاملے کی تحقیقات کیلئے اعلیٰ سطحی کمیٹی تشکیل دی گئی

0 264

سرینگر: بندش شاہراہ کے باعث ایمبولنس گاڑی کو روک دینے سے اس میں سوار مریض کے موت کی معاملے کی تحقیقات کیلئے سی آر پی ایف نے اعلیٰ سطحی ٹیم تشکیل دی ہے ۔ اسی دوران سی آر پی ایف نے شہری کے موت پر رنج و غم کا اظہار کرتے ہوئے دکھ زدہ خاندان کیساتھ تعزیت کا اظہار کیا ہے ۔ خیال رہے کہ 10اپریل کو بندش شاہراہ کے بیچ لور منڈ کے مقام پر فورسز نے ایک ایمبولنس گاڑی کو کئی گھنٹوں تک روک کر رکھا جس کے نتیجے میں گاڑی میں سوار مریض کی موت واقع ہوئی ۔ سی این آئی کے مطابق سنیٹرل ریزرو پولیس فورسز سی آر پی ایف کی طرف سے ایک بیان جاری کیا گیا ہے جس میں سی آر پی ایف نے 10اپریل کو سرینگر جموں شاہراہ پر بندشوں کے باعث جموں کے ڈوڈہ ضلع سے تعلق رکھنے والے ایک مریض کے موت پر گہرے افسوس کا اظہار کیا ہے ۔ بیان کے مطابق یہ بات سامنے آئی ہے کہ 10اپریل کو سرینگر سے ڈوڈہ واپس آ رہی ایک ایمبو لنس گاڑی جس میں عبد القیوم بانڈے نامی مریض سوار تھی کو کئی گھنٹوں تک روک دیا گیا جس کے باعث گاڑی میں سوار مریض کی موت واقع ہوئی ہے ۔ بیان کے مطابق سی آر پی ایف نے مریض کے موت پر گہرے رنج و غم کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ بندش شاہراہ کے باوجود سی آر پی ایف کی ہمیشہ کوشش ہوتی ہے کہ ایمبولنس اور دیگر اہم گاڑیوں کی بنا خلل روانی یقینی بنایا جائے ، بیان میں کہا گیا ہے کہ سی آر پی ایف نے معاملے کے نسبت ایک اعلیٰ سطحی کمیٹی تشکیل دی ہے جنہوں معاملے سے متعلق رپورٹ کرنے کی ہدایت دی گئی ہے ۔

تبصرے
Loading...