امتحان سے 17گھنٹے قبل بی جی سیکنڈ سمسٹر کا انگریزی پرچہ سوشل میڈیا پر وائرل ، طلاب میں غم و غصہ

کشمیر یونیورسٹی کو آج کا پرچہ ہنگامی بنیادوں پر ملتوی کرنا پڑا ، امید وار امتحانی مراکز میں پہنچ کر گھر واپس لوٹنے پر مجبور

0 79

سرینگر: امتحانات میں شفافیت کو لیکر کشمیریونیورسٹی پر اس وقت سوالیہ نشان کھڑا ہوا جب 09مئی کو لئے گئے بی جی سیکنڈ سمسٹر کا امتحانی پرچہ امتحان سے 17گھنٹے قبل ہی سوشل میڈیا پر وائرل ہوگیا تھا ۔ اسی دوران طلباء کے احتجاج کے بعد کشمیر یونیورسٹی نے سنیچروار کو لئے جانے والے انورمنٹ سائنس کا پرچہ ہنگامی بنیادوں پر ملتوی کرنا پڑا جس کے باعث طلاب کو امتحانی سنیٹروں سے واپس گھروں کو لوٹنا پڑا ۔ سی این آئی کے مطابق امتحانات میںشفافیت کے کشمیر یونیورسٹی کے دعوئے اس وقت سراب ثابت ہو ئے جب گورئمنٹ ڈگری کالج کولگام میں زیر تعلیم طالب علم نے الزام عائد کیا کہ 09مئی کو منعقد ہونے والا بی جی سیکنڈ سمسٹر کاانگریزی پرچہ امتحان سے قبل ہی سوشل میڈیا پر وائرل ہو گیا تھا ۔ طلاب نے الزام عائد کہا کہ 09مئی کو لئے جانے والے انگزیری پرچہ 08مئی کی شام کو ہی واٹس ایپ پر وائرل ہو گیا تھا اور وہ یہ دیکھ کر حیران رہ گئے کہ جو پرچہ گزشتہ شام سوشل میڈیا پر وائرل ہو گیا تھا وہیں انہیں 09مئی کو امتحانی مراکز میں دیا گیا ۔ گورئمنٹ ڈگری کالج کولگام میں تعینات ایک پروفیسر نے اس کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا کہ امتحانی پرچہ امتحان سے قبل ہی وائرل ہو گیا تھا ۔اور انہوں نے اس بارے میں کشمیری یونیورسٹی کے امتحانی کنٹرولر کو پہلے ہی آگاہ کیا تھا ۔ اسی دوران امتحانی پرچہ وائرل ہونے پر طلاب نے شدید ناراضگی کا اظہار کرتے ہوئے الزام عائد کیا کہ کشمیر یونیورسٹی ان کے مستقبل سے کھلواڑ کر رہی ہے اور اس کی مکمل تحقیقات ہونی چاہئے ۔ ادھر سی این آئی کو معلوم ہوا ہے کہ انگریزی پرچہ سوشل میڈیا پر وائرل ہونے کی خبریں سامنے آنے کے بعد کشمیر یونیورسٹی نے سنیچرار کو لئے جانے والے بی جی سیکنڈ سمسٹر انورمنٹ سائنس کے پرچے کو ہنگامی بنیادوں پر ملتوی کر دیا ۔ طلبا ء نے اس پر شدید برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ وہ امتحانی مراکز تک پہنچ گئے تھے اور انہیں وہاں بتایا گیا کہ ان کا امتحانی پرچہ ملتوی ہو ا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ امتحان منعقد ہونے کو محض ایک گھنٹہ باقی تھا اور انہوں نے تمام تیاریاں مکمل کی تھی تاہم جونہی وہ امتحانی مراکز تک پہنچ گئے تو انہیں وہاں بتایا کہ آج کا پرچہ ملتوی کر دیا گیا ۔ اس ضمن میں اگرچہ سی این آئی نے کنٹرولر امتحانات کشمیر یونیورسٹی سے رابطہ کرنے کی کوشش کی تاہم رابطہ ممکن نہ ہو سکا ۔( سی این آئی )

تبصرے
Loading...